سابق وزیراعظم اور پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان کا ڈیفالٹ رسک 90 فیصد تک پہنچ گیا ہے، انہوں نے مزید کہا کہ امپورٹڈ حکومت کو کسی بھی بین الاقوامی مالیاتی اداروں سے امداد دی جارہی ہے حتیٰ کہ دوست ملک بھی مدد کرنے سے گریزاں ہیں۔
یہ بات انہوں نے جمعہ کو اپنی رہائش گاہ زمان پارک لاہور سے ویڈیو لنک کے ذریعے وکلاء فورم سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔

Pakistan on brink of debt default'

Image Source: The Express Tribune

انہوں نے کہا کہ ملک میں انصاف کا نظام قائم ہونے تک ملک ترقی نہیں کر سکتا۔
انہوں نے مزید کہا کہ دونوں خاندان اپنی کرپشن کی وجہ سے امیر سے امیر تر ہوتے جا رہے ہیں جبکہ ملک غریب سے غریب تر ہوتا جا رہا ہے۔
انہوں نے کہا کہ پنجاب میں ان کی حکومت ہونے کے باوجود پولیس ان کی ہدایات پر عمل نہیں کر رہی، انہوں نے مزید کہا کہ وہ سابق وزیراعظم تھے لیکن بعض حلقوں کے دباؤ کی وجہ سے وہ وزیر آباد میں ان پر قاتلانہ حملے کی ایف آئی آر درج نہیں کروا سکے۔ .