شنگھائی تعاون تنظیم کے سیکرٹری جنرل سفیر ژانگ منگ جمعرات سے پاکستان کا چار روزہ دورہ کر رہے ہیں۔

وہ بیجنگ میں قائم شنگھائی تعاون تنظیم کے سیکرٹریٹ کے عہدیداروں پر مشتمل وفد کی قیادت کریں گے۔

اپنے قیام کے دوران سیکرٹری جنرل وزیر خارجہ کے ساتھ ساتھ تجارت، موسمیاتی تبدیلی، انفارمیشن ٹیکنالوجی اور سمندری امور کے وزراء سے ملاقاتیں کریں گے۔ وہ انسٹی ٹیوٹ آف سٹریٹجک سٹڈیز اسلام آباد میں بھی خطاب کریں گے اور کاروباری رہنمائوں اور کاروباری شخصیات سے بات چیت کریں گے۔

image source: The Statesman

ایک بیان میں ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ شنگھائی تعاون تنظیم کے سیکرٹری جنرل کا دورہ پاکستان کو شنگھائی تعاون تنظیم کے سیکرٹریٹ کے ساتھ منسلک ہونے کا موقع فراہم کرے گا جبکہ مشترکہ علاقائی سلامتی اور اقتصادی اہداف کو آگے بڑھانے کے لیے ایس سی او کے طریقہ کار کو مزید موثر بنانے کے لیے اپنے نقطہ نظر اور ترجیحات کو اجاگر کرے گا۔

ترجمان نے کہا کہ شنگھائی تعاون تنظیم پاکستان کو رکن ممالک کے ساتھ اپنے گہرے اور تاریخی تعلقات کو مزید مضبوط بنانے اور مختلف شعبوں میں باہمی فائدے کے لیے سماجی و اقتصادی تعاون کو فروغ دینے کے لیے ایک اہم پلیٹ فارم فراہم کرتا ہے۔

شنگھائی تعاون تنظیم ایک بڑی بین علاقائی کثیر جہتی تنظیم ہے جس کے 8 ممبران چین اور روس شامل ہیں۔ ایس سی او ممالک عالمی آبادی کا 41% گھر ہیں اور عالمی جی ڈی پی کا 23% حصہ ہیں۔