تحریک انصاف کے بعد حکومت نے ق لیگ ے رہنماؤں کو بھی ٹف ٹائم دینے کا پروگرام بنا لیا -پولیس میں کی جانے والی نئی تبدیلیوں کے بعد مونس الہی اور پرویز الہی کے لیے بھی زمین تنگ کرنے پر عمل درآمد شروع کردیا گیا ہے -اس کا آغاز ہوگیاہے اور پولیس نے سابق وزیراعلی پنجاب پرویز الٰہی کے قریبی رشتہ داروں کے خلاف ایم پی اے، ایم این اے کے مبینہ اغواءکی سازش کے الزام میں مقدمہ درج کرلیا ہے ۔

 

تفصیلات کے مطابق وجاہت الہی اور موسی الٰہی کے خلاف مقدمہ غالب مارکیٹ میں درج کیا گیا جس میں دہشت گردی ، ٹیلی گراف ایکٹ کی دفعات شامل کی گئیں۔مدعی مقدمہ کے مطابق ٹوئیٹر پر وائرل آڈیو میں دونوں سیاست دانوں نے خواتین ایم پی اے کو غائب کرنے کی گفتگو کی۔ آڈیو کے بعد موسی الٰہی کوٹلہ ارب علی خان میں مسلح ہوکر لوگوں کو ڈراتا رہا۔ایف آئی آر میں کہا گیا کہ دونوں ملزمان نے سوچی سمجھی سازش کے تحت اراکین اسمبلی کو غائب کرنے کا منصوبہ بنایا۔اب دیکھنا یہ ہے کہ پرویز الہی کے قریبی رشتہ دار ور موجودہ نگران وزیراعلیٰ پرویز الہی کے خلاف بھی کاروائی کی اجازت دیتے ہیں یا وہ صرف پی ٹی آئی کے خلاف ہی محاذ کھولے رکھیں گے –