نواز شریف نے پاکستان واپسی کے لیے پارٹی کی سفارشات طلب کر لیں
پنجاب اسمبلی کی متوقع تحلیل اور صوبے میں انتخابات کے بعد، سابق وزیر اعظم اور پاکستان مسلم لیگ نواز (پی ایم ایل این) کے سپریمو نواز شریف نے اپنی اور مریم نواز کی پاکستان واپسی کے لیے پارٹی سے سفارشات طلب کی ہیں۔
مسلم لیگ ن کے اندر ذرائع کے مطابق سینئر قیادت کی عدم موجودگی میں پارٹی کو مسائل کا سامنا ہے۔ سینئر قیادت کے پاکستان واپس نہ آنے کی صورت میں مسلم لیگ ن کو آئندہ انتخابات میں بڑا نقصان اٹھانا پڑے گا۔

Nawaz Sharif gets diplomatic passport

Image Source: The News International

ذرائع کا کہنا ہے کہ بطور وزیر اعظم شہباز شریف مسلم لیگ ن کا موقف پیش کرنے سے قاصر ہیں اور نواز شریف، مریم نواز اور حمزہ شہباز سمیت سینئر قیادت لندن میں موجود ہے۔
پنجاب کے وزیراعلیٰ کے اعتماد کے ووٹ پر صورتحال مختلف ہو سکتی تھی اگر پارٹی کی سینئر قیادت پاکستان میں ہوتی۔
ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ نواز شریف اور مریم نواز کی وطن واپسی کے حوالے سے سفارشات پر تفصیل کے لیے مسلم لیگ (ن) کی سینئر قیادت کی ایک دو روز میں ملاقات متوقع ہے۔
اس سے قبل ذرائع کا کہنا تھا کہ سابق وزیراعظم نے پرویز الٰہی کو ایوان سے اعتماد کا ووٹ حاصل کرنے سے روکنے میں مسلم لیگ ن پنجاب کی ناکامی پر رپورٹ طلب کر لی ہے۔