لاہور: لاہور کی مقامی عدالت نے جمعے کو پاکستان مسلم لیگ نواز (پی ایم ایل این) کے ایم این اے چودھری محمد اشرف کو اراضی فراڈ کیس میں 2 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا۔
مسلم لیگ (ن) کے ایم این اے کو لاہور کی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن عدالت میں پیش کیا گیا جہاں پنجاب اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ نے ان کے جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی۔

FAQ: What is the Difference Between Jail and Prison? - Prison Fellowship

Image Source: PF

عدالت نے دلائل سننے کے بعد چودھری محمد اشرف کا 2 روزہ جوڈیشل ریمانڈ منظور کرتے ہوئے انہیں جیل بھیج دیا۔
یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ پنجاب اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ ٹیم نے منگل کو مسلم لیگ ن کے ایم این اے چوہدری محمد اشرف کو ’زمینوں پر قبضے‘ کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔
این اے 161 ساہیوال سے مسلم لیگ ن کے ایم این اے پر 157 ایکڑ سرکاری اراضی پر قبضے کا الزام ہے۔ محکمہ اینٹی کرپشن پنجاب کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ ن کے قانون ساز نے محمد سلیم پٹواری کی مدد سے جعلی دستاویزات کے ذریعے زمین پر قبضہ کیا۔
الزام کی تصدیق کے بعد قانون ساز کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ ترجمان نے کہا کہ مسلم لیگ ن کے رکن اسمبلی کے خلاف بھی مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔