لاہور: پنجاب کی اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ ٹیم نے منگل کو مسلم لیگ (ن) کے ایم این اے چودھری محمد اشرف کو ‘زمینوں پر قبضے’ کے الزام میں گرفتار کرلیا۔
این اے 161 ساہیوال سے مسلم لیگ ن کے ایم این اے چودھری محمد اشرف پر 157 ایکڑ سرکاری اراضی پر قبضے کا الزام ہے۔ محکمہ اینٹی کرپشن پنجاب کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ ن کے قانون ساز نے محمد سلیم پٹواری کی مدد سے جعلی دستاویزات کے ذریعے زمین پر قبضہ کیا۔

PML-N lawmaker Ch. Ashraf arrested by Punjab ACE in 'land grabbing' case

Image Source: Daily Pakistan

الزام کی تصدیق کے بعد قانون ساز کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ ترجمان نے کہا کہ مسلم لیگ ن کے رکن اسمبلی کے خلاف بھی مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔
اس کے علاوہ، گزشتہ ماہ، پنجاب اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ کی ٹیم نے پاکستان مسلم لیگ نواز کے سینیٹر کے بیٹے اسامہ عبدالکریم کو زمینوں پر قبضے کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔
تفصیلات کے مطابق پنجاب اے سی ای ٹیم نے ڈیرہ غازی خان میں کارروائی کرتے ہوئے اسامہ عبدالکریم کو گرفتار کرلیا۔ مسلم لیگ ن کے سینیٹر کے بیٹے پر مسجد کی زمین پر قبضہ کرکے شاپنگ پلازہ بنانے کا الزام ہے۔
پنجاب اے سی ای حکام کا کہنا ہے کہ گرفتاری مقدمے کے اندراج کے بعد کی گئی۔ انہوں نے کہا کہ اسامہ عبدالکریم سے تفتیش کے بعد کیس کا چالان عدالت میں پیش کیا جائے گا۔