اتوار کو نواں کوٹ کے یتیم خانہ چوک کے قریب 20 سالہ نوجوان پتنگ کی ڈور گلے پر پھر جانے کے سبب جاں بحق ہوگیا۔مقتول کی شناخت شہزاد ولد شیر احمد کے نام سے ہوئی ہے۔ شہزاد موٹرسائیکل پر سوار ہو رہا تھا کہ کٹی پتنگ کی ڈور سے اس کا گلہ بری طرح کٹ گیا ۔ متاثرہ موٹر سائیکل پر سوار ہوکر جارہا تھا کہ اچانک تیز دھاڑ ڈور اس کا گلہ کاٹ گئی اور وہ موٹر سائیکل سے سڑک پر گر گیا اور گلے پر شدید چوٹ آئی جس کے نتیجے میں اس کی موت واقع ہو گئی۔ لاش مردہ خانے منتقل کر دی گئی۔

 

سی سی پی او لاہور نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے پولیس کی غفلت پر تشویش کا اظہار کیا۔ انہوں نے ایس پی اقبال ٹاؤن کو اس حوالے سے رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا۔ انہوں نے متعلقہ پولیس افسران کو پتنگ بازی ایکٹ کی خلاف ورزی میں ملوث افراد کے خلاف سخت کارروائی کرنے کا حکم دیا۔ پولیس ترجمان کے مطابق لاہور پولیس نے رواں سال پتنگ بازی ایکٹ کی خلاف ورزی پر 5 ہزار 967 ملزمان کو گرفتار کیا اور ان کے خلاف 5 ہزار 875 مقدمات درج کیے گئے۔ انہوں نے مزید کہا کہ رواں ماہ کے دوران اب تک تقریباً 185 پتنگ بازوں کو گرفتار کیا جا چکا ہے۔ سمن آباد میں اکثر آسمان پر آپ کو دن کے وقت اور بالخصوص اتوار کے روز پتنگیں اڑتی دکھائی دیتی ہیں