پاکستان مسلم لیگ نواز (پی ایم ایل این) نے لندن میں ایک میٹنگ کے بعد شیڈول کے مطابق عام انتخابات میں حصہ لینے کا فیصلہ کیا ہے۔

باخبر ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ فیصلہ مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف اور وزیر اعظم شہباز شریف کے درمیان آج ہونے والی ملاقات میں کیا گیا۔

اجلاس میں لانگ مارچ کی صورتحال کا بھی جائزہ لیا گیا اور نواز شریف نے حکم دیا کہ قافلے کو کسی بھی قیمت پر دارالحکومت میں داخل نہ ہونے دیا جائے۔

PM Shehbaz in London to meet Nawaz Sharif

image source: The News International

اس حوالے سے اجلاس میں متفقہ رائے دیتے ہوئے کہا گیا کہ کسی کو ریاست کو نقصان پہنچانے کی اجازت نہیں دی جائے گی، ریاست کسی کے ہاتھوں بلیک میل نہیں ہوگی اور کسی کے سامنے گھٹنے نہیں ٹیکے گی۔

علاوہ ازیں اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ عام انتخابات مقررہ وقت پر ہوں گے۔
دوسری جانب شہباز شریف نے پی ٹی آئی کے ساتھ بیک ڈور مذاکرات کے بارے میں بھی شرکاء کو آگاہ کیا۔

ذرائع نے یہ بھی انکشاف کیا ہے کہ مسلم لیگ ن کی قیادت نے نئے آرمی چیف کی تقرری کے لیے مختلف ناموں پر غور کرنے کے بعد ایک نام کو حتمی شکل دے دی ہے جس کا اعلان آئندہ چند روز میں کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ وزیراعظم شہباز شریف گزشتہ روز نواز شریف سے اہم بات چیت کے لیے لندن پہنچے تھے۔