وزیر اعظم شہباز شریف نے کہا ہے کہ عالمی برادری نے ملک میں تباہ کن سیلاب سے ہونے والی تباہی پر پاکستانی عوام کے ساتھ اپنی حمایت کا اظہار کیا ہے۔

آج اسلام آباد میں وفاقی کابینہ کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے وزیراعظم نے کابینہ کو شنگھائی تعاون تنظیم کے اجلاس اور اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کے لیے بالترتیب ازبکستان اور امریکا کے اپنے حالیہ دوروں کے بارے میں آگاہ کیا۔

وزیراعظم نے بتایا کہ انہوں نے اور ان کے وفد نے دونوں تقریبات کے موقع پر چین، روس اور ترکی کے صدور سمیت عالمی رہنماؤں سے انتہائی نتیجہ خیز ملاقاتیں کیں۔

شہباز شریف نے کابینہ کو بتایا کہ وسطی ایشیائی ممالک کی قیادت نے بھی پاکستان کے ساتھ ہر قسم کے رابطوں کی شدید خواہش کا اظہار کیا ہے

image source: BBC

انہوں نے سمرقند میں شنگھائی تعاون تنظیم کے ساتھ ساتھ نیویارک میں اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 77ویں اجلاس میں شرکت کے لیے اپنے دوروں کی کامیابی پر اپنی کابینہ کے اراکین اور اعلیٰ سرکاری افسران کو سراہا۔

وزیراعظم نے خاص طور پر وفاقی وزراء بلاول بھٹو زرداری، مریم اورنگزیب، شیری رحمان، وزیر مملکت حنا ربانی کھر اور دیگر کے دوروں کے دوران عالمی پلیٹ فارمز پر پاکستان کے نقطہ نظر کو اجاگر کرنے کے لیے کردار کو سراہا۔

انہوں نے اسحاق ڈار کو وزیر خزانہ کا عہدہ سنبھالنے پر خوش آمدید کہا اور ان کی کامیابی کے لیے دعا کی۔

وزیراعظم نے مشکل وقت میں بہترین کارکردگی پر سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کی کارکردگی کو بھی سراہا۔