کراچی: پاکستان کو سیلاب کی صورتحال سے نمٹنے کے لیے دوست ممالک سے انسانی امداد کا سلسلہ جاری ہے۔

دفتر خارجہ نے بتایا کہ روس سے پہلی امدادی پرواز بدھ کو کراچی کے جناح انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر اتری۔ امدادی سامان میں کھانے پینے کی اشیاء، خیمے اور پانی کی صفائی کے آلات شامل ہیں۔

یہ کھیپ کراچی میں روسی قونصل جنرل فیڈروف اینڈری نے وصول کی، جو وزیر اعلیٰ کے مشیر برائے ریلیف اور بحالی ہے۔ رسول بخش چانڈیو، نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی اور وزارت خارجہ کے نمائندے۔

KU Teachers Balochistan Flood Relief Effort | Academia

 

 

ترجمان دفتر خارجہ عاصم افتخار نے کہا کہ روس کی جانب سے امدادی امداد کا گرم جوشی اور شکریہ کے ساتھ خیرمقدم کیا جاتا ہے۔

یونان سے پہلی امدادی پرواز بھی کراچی کے جناح انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر اتری۔
یہ کھیپ پاکستان میں یونان کی اعزازی کونسل ایاز محمد لاکھانی نے وزارت خارجہ اور نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے نمائندوں کے ساتھ وصول کی۔

اس سے قبل سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، جرمنی، ترکی اور امریکا سمیت ممالک بھی پاکستان میں سیلاب زدگان کے لیے امداد روانہ کر چکے ہیں۔ امدادی سامان میں فوری طور پر درکار خوراک، حفظان صحت سے متعلق مصنوعات اور طبی سامان شامل تھا۔