کراچی: پاکستان ریلویز نے نواب شاہ سے خیرپور تک ٹرین کی پٹڑی کو نقصان پہنچانے کی وجہ سے کراچی سے ٹرین آپریشن کی معطلی میں مزید 10 دن کی توسیع کردی۔
محکمہ نے صارفین کو ایڈوانس بکنگ فیس کی ادائیگی کا نوٹیفکیشن جاری کیا ہے۔

Train operations from Lahore to Karachi, Quetta suspended

Image Source: ARY News

تفصیلات کے مطابق سیلاب کے باعث کراچی سے ٹرین آپریشن گزشتہ 27 روز سے معطل ہے۔ ریلوے ذرائع کے مطابق ستمبر کے آخر تک آپریشن جزوی طور پر بحال کر دیا جائے گا۔
حکام نے بتایا کہ نواب شاہ سے خیرپور تک متعدد مقامات پر ٹرین کی پٹری خشک ہونا شروع ہو گئی ہے، جبکہ پڈعیدن سے بوجیری تک ٹریک پانی میں ڈوبا ہوا ہے۔
بھیریا روڈ اسٹیشن سے پڈیدان تک 366 کلومیٹر کا ٹریک مکمل طور پر سوکھ گیا ہے۔ جبکہ، ٹرین آپریشن، 15 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار کے ساتھ، بوجیری سے پدیدان تک بحال کیا جا سکتا ہے
محکمہ ران پٹھانی سے خیرپور تک ٹریک کی صورتحال کا سروے کر رہا ہے۔
ریلویز نے روہڑی کے لیے مزید آٹھ ایکسپریس ٹرینوں کو بحال کرنے کا اعلان کیا تھا.
ریلوے کے مطابق 8 ٹرینوں کو پشاور، لاہور، فیصل آباد اور راولپنڈی سے روہڑی جانے کی اجازت ہوگی۔
ٹرینوں میں کراچی ایکسپریس، قراقرم ایکسپریس، فرید ایکسپریس، بزنس ٹرین، علامہ اقبال ایکسپریس، گرین لائن، تیزگام اور جعفر ایکسپریس شامل تھیں۔