پاکستان مسلم لیگ کے مرکزی رہنما اور سابق وزیر اعلیٰ پنجاب جو وزیراعلیٰ کا انتخاب ہارنے کے بعد پاکستان سے انگلینڈ چلے گئے تھے اب وہ وطن واپس لوٹ آئے ہیں حمزہ کی بیٹی ان دنوں شدید علی تھیں اور ایک باپ کے لیے بیٹی کی بیماری سے بڑی تکلیف ہو ہی نہیں سکتی اسی لیے حمزہ اپنی لخت جگر کو دیکھنے اس سے ملنے اور اس کے ٹریٹ منٹ کے لیے فوراً لندن گئے تھے مسلم لیگ ن کے رہنما لندن میں تین ہفتے طویل قیام کے بعد آج صبح لندن سے لاہور ایئرپورٹ پر اترے۔

خیال رہے کہ حمزہ شہباز 4 اگست سے اپنی بیمار بیٹی سماویہ کی دیکھ بھال کے لیے لندن میں تھے۔ لندن میں قیام کے دوران انہوں نے نواز شریف سے بھی ملاقات کی اور ان سے پارٹی کے مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا۔حمزہ شہباز کا لندن کا سفر 07 ستمبر کو وفاقی تحقیقاتی ادارے   کی جانب سے دائر منی لانڈرنگ کیس میں وزیر اعظم شہباز شریف اور حمزہ شہباز پر فرد جرم عائد کرنے کے خصوصی مرکزی عدالت کے فیصلے کے پس منظر میں آیا۔عدالت نے شہباز شریف اور حمزہ شہباز سمیت تمام ملزمان کو فرد جرم عائد کرنے کے لیے 7 ستمبر کو طلب کر لیا۔