لاہور ہائیکورٹ کے راولپنڈی بینچ نے بھی غریب کی حالت دیکھ کر اس پر رحم کھانے کا فیصلہ کرتے ہوئے ایک نہایت انسان دوست حکم نامہ جاری کیا کیونکہ اس حکومت نے جس رفتار سے بجلی کے نرخ بڑھائے تھے اگر ان پر یہ فیصلے نہ آتے تو خود کشیوں کا نہ ختم ہونے والا سلسلہ شروع ہوسکتا تھا جس کی ابتدا بھی ہوگئی تھی جب ایک صارف نے بھاری بل ادا نہ کرنے پر خود سوزی کرلی تھی اسی لیے عدالت کی جانب سے شہریوں کو بجلی کے بلوں پر بڑا ریلیف دیا گیا ہے ۔

https://twitter.com/TanoliZia/status/1564533558663839746

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کے راولپنڈی بینچ نے بجلی کے بلوں میں فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ کی وصولی معطل کردی ہے ، راولپنڈی بینچ کے جسٹس جوادالحسن نے ٹیکس معطل کرکے آئیسکو سربراہ کو 15 ستمبرکو طلب کرلیا۔اس کے علاوہ عدالت نے واپڈا اور نیپرا کو ٹیکس وصولی سے روک کر آئندہ تاریخ پر جواب طلب کرلیا ہے ۔