مبارک ہو کاریں سستی ہو رہی ہیں!

پاکستان میں کاریں اور گاڑیاں سستی ہونا شروع ہوگئیں

اسلام آباد: وفاقی وزیر صنعت و پیداوار خسرو بختیار نے بدھ کے روز کہا ہے کہ حکومت نے گاڑیوں کی قیمتوں کو 230،000 روپے تک کم کرکے اور 2025 تک پیداوار کو 500،000 یونٹ تک بڑھاکر آٹوموبائل صنعت کو فروغ دینے کے اقدامات اٹھائے ہیں۔وفاقی وزیر برائے اطلاعات و نشریات فواد چوہدری کی جانب سے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ رواںمالی سال کے دوران پیداوار بڑھا کر 300،000 اور 2025 تک 500،000 کردی جائے گی۔

 

FILE PHOTO: Tesla China-made Model 3 vehicles are seen during a delivery event at its factory in Shanghai, China January 7, 2020. REUTERS/Aly Song/File Photo

وزیر نے آٹوموبائل سیکٹر کو روزگار کے مواقع پیدا کرنے کا ایک ممکنہ شعبہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ ملک میں تیار کردہ ہر کار کم ازکم پانچ افراد کے لئے روزگار کے مواقع پیدا کرتی ہے۔انہوں نے کہا کہ ‘میری گاڑی اسکیم’ میں مراعات فراہم کی گئی ہیں تاکہ چھوٹی کاروں کو درمیانی طبقے کے لئے معاشی طور پر سستی بنایا جاسکے۔

خسرو نے کہا کہ آٹوموٹو سیکٹر ملک کے ایک بڑے صنعتی شعبے میں سے ایک ہے جو  ملک کی پوری معیشت کو تقریبا . 7.81فیصد زر مبادلہ فراہم کرتا ہے  ۔انہوں نے کہا کہ حکومت ملک میں آٹو پارٹس کی لوکلائزیشن کو فروغ دینے کا ارادہ رکھتی ہے ، اس کا مقصد روزگار پیدا کرنا ،ٹرانپسورٹ کی صنعت کو فروغ دینا اور زرمبادلہ کی بچت کرنا ہے۔

Read Previous

افغان لڑکیاں کب تعلیم حاصل کریں گی:ان کی تعلیم کے لئے دنیا کب آواز اٹھائے گی

Read Next

Jebel Ali Port fire brought under control

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *